جمہوریت کے رد پر شافعی،مالکی،حنبلی علماء کے اقوال

 

اہل سنت و الجماعت شافعی

 

 

   شیخ ابو یحیی اللیبی شہید رحمہ اللہ , شمشیرِ بے نیام ، نظام جمہوریت

 

جسکے نام پر ساٹھ سال قبل عامۃ المسلمین سے قربانیاں طلب کی گئی تھیں؟ اس ریاست کےنزدیک تو "لا الہ الا اللہ" کا کردار بس یہی ہے کہ اسےکفریہ قانون سازی کرنے والی پارلیمان کی عمارت پر جلی حروف میں سجا دیا جائے۔

 

  اسلامی جمہوریت کی اصطلاح استعمال کرنا بالکل ایسے هی هے ، جیسے کوئی شخص اسلامی یہودیت اور اسلامی عیسائیت یا اسلامی مجوسیت کی اصطلاح استعمال کرے . اب بتائیے که کیا یه ممکن یا جائز هو سکتا هے ؟ یه دو علیحده علیحده دین هیں

 

 

اس کی پیدائش سرتاپا کفر میں غرق مغرب میں ہوئی،اس کی پرورش مغرب کے حیاء سے عاری ماحول نے کی اور فسق و فجور میں ڈوبی اس دنیامیں یہ نظام اوج کمال تک پہنچا اور آج یہ نظام مسلمانوں کی غفلت،ان کی حکومت کے ارتداد،اور ان کے معاشروں کی کمزوری کےباعث مسلمان معاشروں میں پھیل چکا ہے۔

 

۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔

شیخ ابو مصعب زرقاوی شہید رحمہ اللہ فرماتے هیں ( مترجم شیخ الحدیث مولانا نور الہدی حفظہ اللہ)

 

ہمارےمعاشرے کے بعض لوگ یه عذرلنگ پیش کرتے هیں که وه "مصلحت دین" کی خاطرجمہوریت میں اترے هیں اور جمہوریت کو محض اقتدار تک پہنچنے کی سیڑهی کے طور پراستعمال کرنا چاہتے هیں ، پهر اقتدار میں پہنچ کر شرعی مقاصد کی تکمیل کرنا ان کامطمع نظر هے . لیکن شاید یه لوگ بات بهول گئے هیں که ہمارے دین نے ہمارے لیے صرف اہداف و مقاصد هی طے نہیں کیے ، بلکه ان تک پہنچنے کا راستہ  بهی ہمیں تفصیل سےبتلایا هے . پس الله کے دین سے متصادم رسته اختیار کر کے دینی مقاصد حاصل کرنا نه تو ممکن هے ، نه هی جائز . افسوس که ہمارے یه بهائی اس اہم نکتے سے نظریں چراتےہوئے ، "مصلحت" کے نام پر در حقیقت دین کے اصولوں پر سودا بازی کرنا میں مصروف هیں.

 

مزیدفرماتے ہیں

 

جمہوریت کے بنیادی اصول یہ توممکن ہے کہ جمہوریت کی ایک سےزائد تعبیریں اور تفسیریں ہوں،لیکن تفسیریاتعبیرکےہراختلاف کےباوجودجمہوریت کی تمام اقسام میں کچھ مشترک بنیادیں ہیں جن پرجمہوریت کی عمارت کھڑی ہوتی ہے۔

 یہ سات مشترکہ بنیادیں درج ذیل ہیں

 1۔لاالہٰ الا الانسان کاکفریہ کلمہ

 2۔عقیدےکی آزادی کا شیطانی اصول

 3۔باہمی جھگڑوں میں عوام کوحاکم وفیصل ماننے کا باطل اصول

 4۔آزادی اظہارِرائےکاگستاخ اصول

 5۔دین ودنیا کی علیحدگی کا شرکیہ اصول

 6۔سیاسی جماعتوں‌اورانجمنوں کی تشکیل کی آزادی کافاسد اصول

 7۔کثرتِ رائے کی اتباع کا گمراہ کن اصول جمہوریت ایک مستقل دین۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔

الشیخ ابومصعب زرقاوی شہید رحمہ اللہ تعالیٰ حطین شمارہ نمبر :8۔۔۔صفحہ نمبر:131